News details

پی ایس ایل فور:فخر زمان کو لاہور قلندرز کی کارکردگی پر اعتماد

فرنچائز نے کوئی ٹائٹل تو نہیں جیتا مگر اس بار مایوس نہیں کرے گی،اوپننگ بیٹسمین

15-Nov-2018

ابوظہبی(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔15نومبر2018ء) قومی کرکٹ ٹیم کے جارح مزاج بیٹسمین فخر زمان نے لاہور قلندرز کی کارکردگی پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی فرنچائز نے اگرچہ کوئی ٹائٹل تو نہیں جیتا مگر اس مرتبہ وہ شائقین کو مایوس نہیں کرے گی۔پاکستان سپر لیگ کے چوتھے ایڈیشن کیلئے ڈرافٹ سے قبل فرنچائز میں پلاٹینم کیٹگری میں برقرار رکھے جانے پر خوشی کا اظہار کرتے ہوئے فخر زمان کا کہنا تھا کہ چوتھے ایڈیشن میں ان کی ٹیم اپنے مداحوں کو مایوس کئے بغیر بہترین کھیل کا مظاہرہ کرے گی اور انہیں اس بات کی بھی بہت زیادہ خوشی ہے کہ وہ خود بھی ا?ئندہ سیزن میں فرنچائز کا حصہ ہوں گے۔

 

فخر زمان کا کہنا تھا کہ لاہور قلندرز نے اگرچہ پاکستان سپر لیگ کا کوئی ٹائٹل تو نہیں جیتا لیکن فرنچائز نے گراس روٹ لیول پر جو کام کیا ہے اس کی دنیا میں کہیں مثال نہیں ملتی اور اسی وجہ سے لاہور قلندرز نے لاکھوں لوگوں کے دل بھی جیتے ہیں۔

 

(جاری ہے)

 

 

 

فخر زمان نے ٹیم کی ہمیشہ غیر مشروط حمایت کرنے والے پرستاروں سے وعدہ کیا ہے کہ اس بار لاہور قلندرز کی ٹیم انہیں مایوس نہیں کرے گی اور ان کی جانب سے بہترین کھیل کا مظاہرہ کیا جائے گا۔

 

یاد رہے کہ پی ایس ایل کا چوتھا ایڈیشن آئندہ برس 14 فروری کو شروع ہوگا، ایونٹ کے 8 میچز پاکستان اور باقی یو اے ای میں کھیلے جائیں گے۔اگلے برس 14 فروری سے شروع ہونے والی پاکستان سپر لیگ کا ڈرافت 20 نومبر کو اسلام آباد میں ہو گا جس کےلئے ملکی اور غیر ملکی کھلاڑیوں سمیت 663 کھلاڑیوں کی فہرست جاری کر دی گئی ہے۔ڈرافٹ میں پلاٹینم ، ڈائمنڈ ، گولڈ ، سلور اور ایمرجنگ کی کٹگریز شامل ہیں۔

 

پلاٹینم کیٹگری میں ابراہام ڈی ویلیئرز، سٹیو سمتھ،کیرون پولارڈ، کرس لائن، سنیل نارائن ، لیوک رونچی، تھیسارا پریرا، کورے اینڈرسن، شین واٹسن اور ڈووین براوو جیسے نامور کھلاڑیوں کو رکھا گیا ہے۔ آئندہ سیزن کے ڈرافٹ میں تمام فرنچائزز کے پاس یہ اختیار ہو گا کہ وہ گزشتہ سیزن کے دس کھلاڑیوں کو اپنے سکواڈ میں برقرار رکھ سکتے ہیں۔ کھلاڑیوں کے لئے ریٹینشن ونڈو کی آخری تاریخ 13 نومبر ہو گی۔

 

واضح رہے کہ آئندہ سیزن کیلئے چند کھلاڑیوں کی مختلف ٹیموں میں ٹریڈ ہو چکی ہے جس میں ویسٹ انڈیز کے سپنر سنیل نارائن اور پاکستانی بیٹسمین عمر اکمل شامل ہیں جو لاہور قلندرز سے کوئٹہ گلیڈی ایٹرز میں جاچکے ہیں، یہ ٹریڈ ونڈو آج بند ہو جائےگی۔ ہر سکواڈ میں سولہ کھلاڑی رکھے جا سکتے ہیں جس میں3 ،3کھلاڑی پلاٹینم، ڈائمنڈ، گولڈ اور5سلور جبکہ دو ایمرجنگ پلیئرز شامل ہیں۔ 

#LahoreQalandars